دیکھئے چیف منسٹر صاحب: قانونی نوٹس کے باوجود اسپتال نے نہیں کی تھی ادائیگی

0
89

گورکھپور: بابا راگھو سوامی میڈیکل کالج میں ایک کے بعد ایک ساٹھ معصوموں کی اموات نے ملک بھر کے لوگوں کو سکتے میں ڈال دیا ہے. آکسیجن سپلائی کو لے کر ایک بڑا انکشاف ہوا ہے. بی آر ڈی ہاسپٹل کو آکسیجن سپلائی کرنے والی کمپنی کا کہنا ہے کہ ادائیگی کو لے کر اسپتال کو آگاہ کروایا گیا تھا، لیکن کوئی جواب نہیں ملا.

 

بی آر ڈی ہاسپٹل کے پرنسپل کو ادائیگی کو لے کر ہر طرح سے مطلع کیا گیا، پر انہوں نے کوئی رد عمل نہیں دیا. یہاں تک کہ ادائیگی کو لے کر پشپا سیلز پرائیویٹ لمیٹڈ نے انہیں قانونی نوٹس تک بھیجا، پر کوئی کارروائی نہیں ہوئی اور نہ ہی ادا کیا گیا.

کمپنی کی طرف سے ادائیگی کو لے کر بھیجے گئے ایپلی کیشنز میں صاف نظر آ رہا ہے کہ اسپتال ایڈمنسٹریشن کو بخوبی جانتے تھے کہ آکسیجن سپلائی کرنے والی کمپنی کی کل 68،65،702 روپے کی رقم واجب الادا ہے، لیکن پھر بھی لاپرواہی برتی گئی. جس کا خمیازہ 35 معصوموں کو اپنی جان دے کر گنوانا پڑا.

اتنی ہی نہیں ادائیگی کو لے کر اسپتال کو بھیجی گئی نوٹس میں یہ بھی بتایا گیا کہ آکسیجن کی کمی کی وجہ اسپتال میں مختلف وارڈوں میں داخل مریضوں اور خاص طور پر بچوں کو پریشانی ہو سکتی ہے. لیکن کمپنی کی وارننگ کو انسنا کر دیا گیا اور آکسیجن کا کوئی انتظام نہیں کیا گیا. نتیجے کے طور پر 60 سے زیادہ لوگ آکسیجن کی کمی کی وجہ سے دم توڑ دیے.