کشمیر: شوپیاں میں دہشت گردوں کے ساتھ تصادم میں دو نوجوان شہید، تین زخمی

0
74

سرینگر: جموں و کشمیر کے شوپیاں ضلع کے ایک گاؤں میں سیکورٹی فورسز کی طرف سے گھیر لئے گئے دہشت گردوں کے ساتھ جاری تصادم میں 2 نوجوان شہید ہو گیا، جبکہ 3 دیگر زخمی ہو گئے. یہ معلومات حکام نے دی.

پولیس نے بتایا کہ دہشت گردوں کی موجودگی کی پختہ اطلاع ملنے کے بعد قومی رائفلس، پولیس اور مرکزی ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) سمیت سیکورٹی فورسز نے شوپیاں کے اونيرا گاؤں میں انہیں گھیر لیا، جس کے بعد دہشت گردوں نے فائرنگ شروع کر دی.

پولیس نے بتایا، “زخمی فوجیوں کو اسپتال پہنچا دیا گیا ہے. گاؤں میں اب بھی تصادم جاری ہے. “

انويرا گاؤں سے ملی خبروں کے انسارك، حفاظتی دستوں کی گھےرےبدي توڑنے کے لئے مقامی باشندوں نے سکیورٹی پر پتھراؤ بھی کیا.

سکیورٹی اور مظاہرین کے درمیان جھڑپ میں سات شہریوں کے پیلیٹ گن سے زخمی ہونے کی خبر ہے، جنہیں علاج کے لئے ہسپتال میں داخل کروایا گیا ہے.

پولیس نے ان افواہوں کو سختی سے مسترد کیا ہے، جس میں کہا جا رہا ہے کہ سکیورٹی فورسز اور دہشت گردوں کے درمیان تصادم کے دوران ایک مسجد کو نقصان پہنچا ہوا ہے.

ایک پولیس افسر نے بتایا، “سکیورٹی فورسز نے جیسے ہی گاؤں گھیر کر سیکورٹی ہوپ کسنا شروع کر دیا، دہشت گردوں نے سکیورٹی فورسز پر فائرنگ شروع کر دی اور تصادم شروع ہو گئی، جو اب بھی جاری ہے.”

پولیس نے بتایا کہ گاؤں میں تین دہشت گردوں کے گھرے ہونے کی اطلاع ہے.