لال قلعہ میں ملا کارتوس اور دھماکہ خیز مواد کا ذخیرہ، فوج،این ایس جی موقع پر پہنچی

0
38
red fort

نئی دہلی: لال قلعہ میں محکمہ آثار قدیمہ کو صفائی کے دوران بڑی تعداد میں کارتوس اور دھماکہ خیز ملے ہیں. اس معاملے کی اطلاع ملتے ہی این ایس جی، بھارتی فوج، فائر ڈیپارٹمنٹ اور بم ڈسپوزل دستہ موقع پر پہنچ گیا ہے.

بتا دیں کہ قومی دارالحکومت میں اس وقت ہلچل مچ گئی، جب محکمہ آثار قدیمہ کو لال قلعہ کی صفائی کے دوران رائفل کے كارتوسو کا جكھيرا اور دھماکہ خیز ملا تھا. ابتدائی تحقیقات کے بعد پولیس کا کہنا ہے کہ برآمد کارتوس اور دھماکہ خیز مواد بیکار ہو چکے ہیں.

red fort

كهي یہ اس وقت کے کارتوس تو نہیں
پولیس ذرائع نے بتایا کہ کارتوس اور دھماکہ خیز مواد کو ایسی جگہ پر رکھا گیا تھا، جہاں کوئی آتا جاتا نہیں ہے. ایسا اندازہ لگایا جا رہا ہے کہ کسی نے جان بوجھ کر انہیں یہاں چھپا رکھا ہو. مانا تو یہ بھی جا رہا ہے کہ جس وقت بھارتی فوج یہاں رہتی تھی ہو سکتا ہے کہ اسی وقت یہ کارتوس اور دھماکہ خیز مواد یہاں چھوٹے ہوں گے.

red fort

آخر کیسے ہوئی اتنی بڑی چوک؟
قابل ذکر ہے کہ پی ایم مودی نے 15 اگست کو لال قلعہ کی فصیل سے ملک کو خطاب کیا تھا. اس دوران بھی سیکورٹی ایجنسیوں نے چپے چپے کی تلاشی لی تھی. سوال یہ اٹھتا ہے پھر اتنی بڑی مقدار میں یہ دھماکہ خیز مواد یہاں آئے کس طرح؟ بھلے ہی سیکورٹی ایجنسیاں سیکورٹی کے تمام دعوے کر رہی ہو لیکن سوال یہ اٹھتا ہے کہ سیکورٹی ایجنسیوں سے اتنی بڑی چوک آخر ہوا کس طرح؟