کشمیر: شوپیاں میں فوج کے جوان عرفان کا بے رحمانہ قتل، دہشت گردوں پر شک

0
86

سرینگر: جموں و کشمیر کے شوپیاں میں ٹیرٹوريل آرمی کے جوان عرفان ڈار کی لاش ملنے سے افرا تفری مچ گئی ہے. 23 سالہ عرفان چھٹی پر تھا اور جمعہ سے غائب چل رہا تھا. ذرائع کے مطابق عرفان کی دہشت گردوں نے اغوا کرکے قتل کیا ہے.

پولیس نے بتایا کہ ڈار کا مردہ جسم شوپیاں ضلع واقع وتھمللا گاؤں کے كيگام سے ملا ہے. انہیں مقامی باشندوں نے مردہ جسم پائے جانے کی خبر دی تھی. پولیس نے لاش کو پوسٹ مارٹم کے لئے بھیج دیا ہے.

وزارت دفاع کے ترجمان کرنل راجیش کالیا نے بتایا، “23 سالہ سپاہی عرفان احمد ڈار شوپیاں ضلع کے سےنجےن گاؤں کا رہائشی تھا. وہ فوج میں بطور فوجی ملازم تھا. وہ باديپورا ضلع میں ٹیی یونٹ میں تعینات تھا. “

انہوں نے کہا، “وہ 26 نومبر تک چھٹی پر تھا. ایسا لگ رہا ہے کہ چھٹیوں کے دوران دہشت گردوں نے اسے اغوا کر اسے قتل کردیا. پولیس معاملے کی تحقیقات کر رہی ہے. “

ڈار کی لاش پر گولیوں کے نشان تھے. پولیس نے شوپیاں ضلع کے كيگم گاؤں سے ہفتے کی صبح لاش برآمد کیا.

اس سے پہلے اسی سال مئی میں فوج کے لےپھٹينےٹ عمر کو اغوا کر ان کا قتل کر دی گئی تھی. 22 سال کے عمر شوپیاں میں شادی کی تقریب میں شرکت کے لئے گھر آئے تھے.