گنیز بک ریکارڈ سے ایک قدم دور ہیں اعظم، لیکن آسان نہیں ہے اس بار جیت کی راہ

0
10
azam khan

رام پور: آپ متنازعہ بیانات سے ہمیشہ بحث میں رہنے والے سماج وادی پارٹی کے سینئر لیڈر اور قدآور وزیر اعظم خان کو رام پور کی صدر اسمبلی کی سیٹ سے مسلسل نویں جیت درج کرنے کے لئے سخت مشقت کرنا پڑ رہی ہے. اگر وہ جیتے تو ان کا نام بھی گنیز بک میں درج ہو جائے گا. پرتاپ گڑھ کی رام پور خاص سیٹ سے کانگریس کے پرمود تیواری مسلسل نو بار جیت کر اپنا نام گنیز بک میں درج کرا چکے ہیں.

azam khan

اعظم خان اب تک آسانی سے جیت درج کرتے رہے ہیں. ان کا دعوی بھی رہا ہے کہ انہیں گھر گھر جا کر اپنا پرچار کرنے کی ضرورت نہیں ہے کیونکہ وہ اپنے اسمبلی حلقہ میں اتنا کام کرا چکے ہیں کہ عوام ان کے علاوہ کسی اور کو منتخب کر ہی نہیں سکتی. لیکن اس بار وہ سہ رخی مقابلے میں پھنسے ہوئے ہیں. رام پور صدر کی نشست پر بی ایس پی جانب بی جے پی کے امیدوار کو سخت ٹکر دے رہے ہیں.

azam khan

آسان نہیں ہے راہ
اعظم خان 8 بار اس سیٹ سے جیت چکے ہیں لیکن اس بار ان کی راہ آسان نہیں لگ رہی ہے. اگر وہ جیتے تو پرمود تیواری کے برابر آ جائیں گے.

لیکن، بی جے پی کے شیو بہادر سکسینہ اور بی ایس پی کے تنویر کی محنت نے ان کی پیشانی پر بل لا دیئے ہیں. وہ بھلے یہ کہیں کہ انہیں آسان جیت ملے گی لیکن اندر سے انہیں بھی گھبراہٹ ہے. بی ایس پی کے تنویر بھی چونکہ مسلمان ہیں لہذا اعظم کو اقلیتی ووٹوں کے بٹنے کا ڈر ستا رہا ہے. بی ایس پی سربراہ مایاوتی مسلسل مسلمانوں سے ووٹ دینے کی اپیل کر رہی ہیں. مایاوتی اپنے ہر اجتماع میں کہتی ہیں کہ مسلمان ایس پی کو حمایت کر کےاپنا ووٹ ضائع نہ کریں. رام پور صدر نشست پر مسلم ووٹروں کی تعداد 50 فیصد ہے.

azam khan

ٹمبر مرچنٹس افضل کہتے ہیں کہ اعظم کے لئے اس وقت مشکل پیش آ سکتی ہے. جوہر یونیورسٹی کے بننے کے وقت ان کی زیادتیاں لوگ بھولے نہیں ہیں. اسی لئے انہیں اس بار گھر گھر جا کر پبلیسٹی کرنا پڑ رہی ہے اور لوگوں سے ووٹ دینے کی اپیل کرنا پڑ رہی ہے. افضل تو یہ بھی کہتے ہیں کہ لوگ ہوئی زیادتی کا بدلہ اعظم سے الیکشن میں لیں گے.
رام پور میں دوسرے مرحلے میں 15 فروری کو پولنگ ہوگی.