غلام نبی آزاد بولےصوفے پر بیٹھ کر سیاست کرتی ہیں مایا، نیچے بیٹھتے ہیں لوگ

0
18
ghulam nabi azad

متھرا / ہاتھرس: کانگریس کے قومی جنرل سکریٹری اور یوپی انتخابات انچارج غلام نبی آزاد نے متھرا میں منگل (7 فروری) کو اپوزیشن پارٹیوں کو جم کر آڑے ہاتھوں لیا. انہوں نے کہا کہ ‘مایاوتی صرف صوفے پر بیٹھ کر سیاست کرنا جانتی ہیں اور عوام نیچے بیٹھتی ہے. لیکن کانگریس میں ایسا نہیں ہے. ‘بی جے پی کو روکنے کے لئے سماج وادی پارٹی اور کانگریس کا اتحاد ضروری تھا. آنے والے لوک سبھا انتخابات بھی مل لڑا جائے گا. ‘

یہ بات انہوں نے ایس پی کانگریس اتحاد کے امیدوار پردیپ ماتھر کی حمایت میں منعقد جلسہ عام میں کہی. بتا دیں کہ متھرا میں فیز -1 میں 11 فروری کو ووٹنگ ہوگی.

گنگا جمنی تہذیب نے مل کر رہنا سکھایا
وہیں دوسری طرف آزاد نے ایک اور اجتماع ہاتھرس میں کی. یہاں ایس پی کانگریس اتحاد کے امیدوار راجیش راج زندگی کے لئے جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے غلام نبی آزاد نے کہا کہ ‘دونوں پارٹیاں الگ الگ تھیں اب مل کر ایک ہو گئی ہیں. آزاد نے کہا، ہماری گنگا جمنی تہذیب نے سب کو مل کر رہنا سکھایا ہے. ایسا کوئی گاؤں نہیں جس ہندو مسلم نہ ہوں. لیکن گزشتہ دو ڈھائی سال میں لوگ ڈرنے لگے ہیں. ‘

مودی عید پر ٹوپی پہننے سے ڈرتے ہیں
آزاد نے مزید کہا، حکومت تو اٹل بہاری واجپئی کی بھی تھی. ایسا لیڈر آج تک بی جے پی میں تو کیا ملک میں نہیں ہو گا. اٹل نے بھی 6 سال حکومت کی تھی. کوئی خوف نہیں، کوئی خوف نہیں تھا. آج ایسا نہیں ہے. جب عید ہوتی تھی تو اٹل بہاری واجپئی اپنے گھر پر عید ملاپ تقریب کرتے تھے اور ٹوپی پہنتے تھے. لیکن موجودہ وزیر اعظم ٹوپی پہننے سے ڈرتے ہیں. ‘

ghulam nabi azad

آر ایل ڈی موقع پرست پارٹی
غلام نبی آزاد نے قومی لوک دل (آر ایل ڈی) پر بھی موقع-پرستی کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ ‘لوک سبھا کا الیکشن لڑتے وقت بی جے پی کا دامن تھاما. اسمبلی میں ہمارے ساتھ آئے اور اب ہمارے یہاں دال نہ گلنے پر اکیلے الیکشن لڑ رہے ہیں. آنے والا وقت ترقی اور پیش رفت کا ہوگا. سیاست میں جمود کی ضرورت رہتی ہے، لیکن آر ایل ڈی ہے کہ ایک جگہ رہتی ہی نہیں. ‘

اور کیا بولے گلاب نبی آزاد؟
نےسابق مرکزی وزیر نے مزید کہا کہ ‘وزیر اعظم مودی کے نوٹبدي کے فیصلے سے قریب 120 غریب لوگ مارے گئے. ایک درجن بچوں نے اپنی ماں کی گود میں ہی دم توڑ دیا. ایک خاتون نے لائن میں ہی بچے کو جنم دیا. اس سے بڑی شرم کی بات اور کیا ہو سکتی ہے. باوجود اس کے وزیر اعظم نوٹبدي کو لے کر اپنی پیٹھ تھپتھپا رہے ہیں. نوٹبدي سے ہر طبقہ متاثر ہوا ہے. ‘

حکومت بنی تو ماتھر ہوں گے کابینہ وزیر
اسی اجتماع میں کانگریس لیڈر راج ببر نے بھی اپنے انداز میں مخالفت پر طنز کئے. یوپی پردیش کانگریس صدر راج ببر نے کہا کہ ‘اگر حکومت بنی تو پردیپ ماتھر کابینہ وزیر بنیں گے.’

روڈ شو بھی کیا
اس کے بعد غلام نمی آزاد و راج ببر نے کانگریس ایس پی امیدوار پردیپ ماتھر کے حق میں ورندعون کے سییفسی چوراہے سے روڈ شو کیا. دونوں رہنماؤں نے عام جنوری سے پارٹی امیدوار کے حق میں زیادہ سے زیادہ ووٹ کرنے کی اپیل کی.

ghulam nabi azad