مایاوتی بولي- مسلم سماج اب نہیں رہا سماجوادی پارٹی کا غلام، اعظم خان ببوا کا چاپلوس

0
13
mayawati
1 of 3

لکھنؤ: بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کی سربراہ مایاوتی نے کہا ہے کہ مسلم سماج اب سماج وادی پارٹی (ایس پی) کا غلام نہیں رہا. اس معاشرے نے ان کی غلامی چھوڑ دی اور بی جے پی کو شکست دینے کے لئے پارٹی سے جڑنے کا فیصلہ لیا ہے.

azam khan

مایاوتی نے اتوار (26 فروری) کو جاری ایک بیان میں ایس پی کے قدآور لیڈر اعظم خان پر حملہ بولا، ‘ان مسلمانوں کو ایس پی غلام بنا کر رکھنے کی کوشش اب مکمل طور پر ناکام ثابت ہو گئی ہے. ایسی صورت میں انہیں سماج وادی پارٹی کے اوپر لعنت ملامت کرنی چاہیے، نہ کہ مسلم معاشرے پر. ‘

اعظم قوم، صوبے اور ملک کی فکر کریں
مایاوتی نے مزید کہا کہ ‘اعظم کا مسلمانوں کو لعنت ملامت کرنا غیر شائستہ ہی نہیں بلکہ سماج وادی پارٹی کی چاپلوسی بھی ہے. خان آپ ضمیر کو مار کر پہلے ایس پی لیڈر ملائم سنگھ یادو اور اب ان کے بیٹے ببوا کی چاپلوسی کر رہے ہیں. اب مسلم معاشرے کے لوگ خود اپنا اچھا-غلط سمجھ کر فیصلہ لے رہے ہیں کہ ریاست میں صرف بی ایس پی ہی بی جے پی اینڈ کمپنی کو ناکام کر سکتی ہے. اس لئے انہوں نے اس خاص مقصد کو لے کر کافی بڑھ چڑھ کر انتخابات میں حصہ لیا ہے. جو اعظم کی ناراضگی کا سبب بنا ہے پر ایس پی لیڈر کو اپنے مستقبل سے زیادہ اپنی قوم، صوبے اور ملک کی فکر پہلے کرنی چاہئے. ‘

1 of 3