میرٹھ میں بھنسالی اور دیپیکا کے سر پر پانچ کروڑ انعام کا اعلان

0
206

میرٹھ: سنجے لیلا بھنسالی کی فلم پدماوتی پر تنازعہ جاری ہے. اسی کڑی میں جمعرات (16 نومبر) کو میرٹھ میں چھتریہ معاشرے کے ٹھاکر ابھیشیک سوم نے متنازعہ بیان دیتے ہوئے فلم اداکارہ دیپکا پڈوکون اور سنجے لیلا بھنسالی کی گردن کاٹنے والے کو چھتریہ معاشرے کی طرف سے 5 کروڑ روپے کی رقم دینے کا اعلان کیا ہے .

غور طلب ہے کہ چھتریہ معاشرے کے لوگ اس فلم میں رانی پدماوتي کے مثال کو غلط طریقے سے بطور مزید عکاسی جانے کا الزام لگاتے ہوئے احتجاج لگا رہے ہیں. چھتری سماج کا کہنا ہے کہ اس فلم کی نمائش پر فوری طور پر پابندی عائد کردی جائے گی.

اگر دیپکا نے ملک نہیں چھوڑا تو۔۔۔۔۔
ابھیشیک سوم نے خبردار کرتے ہوئے کہا ہے، کہ ‘اس فلم کو ریلیز ہونے سے روکا جائے، نہیں تو انجام برا ہوگا.’ ابھیشیک نے کہا، کہ وہ کے ذریعے غلط معلومات دیے جانے سے دلبرداشتہ ہیں. انہوں نے کہا، “اگر دیپکا ملک سے نکل نہیں آتی، تو پھر اسے نتائج کا سامنا کرنا پڑا.”

‘نریندر مودی بھی دیپکا کو نہیں بچا سکتے’
اتنا ہی نہیں ابھیشیک سوم نے کہا، کہ ‘دیپکا کو نریندر مودی بھی نہیں بچا سکتے.’ ابھیشیک نے چھتریہ سوسائٹی کی جانب سے مطالبہ کیا ہے کہ اس فلم پر پابندی لگا دی جائے. ٹھاکر ابھیشیک سوم چھتری سماج سے تعلق رکھتا ہے اور ٹھاکر ابھیشیک سے منسلک ہے. ابھیشیک سوم نے بتایا، کہ ‘وہ سماج وادی پارٹی سے جڑے ہیں لیکن اس معاملے سے پارٹی کا کوئی لینا دینا نہیں ہے. وہ چھتریہ ہیں اور اسی وجہ سے وہ دعوی کر رہے ہیں.