آگرہ کینٹ ریلوے اسٹیشن کے قریب دو دھماکے، کل ہی ملی تھی ٹریک اڑانے کی دھمکی

آگرہ: محبت کی نگری آگرہ میں ان دنوں دہشت گرد تنظیم (آئی ایس آئی ایس) کا خطرہ منڈلا رہا ہے. جمعہ 17 مارچ کو آئی ایس آئی ایس کی طرف سے تاج کو اڑانے کی دھمکی کے بعد آگرہ شہر سیکورٹی ایجنسیوں کی نگرانی میں ہے. لیکن ہفتہ (18 مارچ) کو آگرہ کینٹ ریلوے سٹیشن کے قریب دو دھماکے ہوئے. جس کے بعد سیکورٹی ایجنسیوں میں کھلبلی مچ گئی. اگرچہ ان دھماکوں میں کسی جانی نقصان کی اطلاع نہیں ہے. دھماکوں کی اطلاع ملتے ہی اعلی عہدیدار، فورینزک اور ڈاگ سكويڈ ٹیم نے موقع پر پہنچ کر معاملے کی چھان بین شروع کر دی ہے.

agra blasts

پہلا دھماکہ
-پهلا دھماکہ آگرہ کینٹ ریلوے اسٹیشن کے قریب ہوٹل خواجہ میں ہفتہ کو شہر کارپوریشن اہلکار کے کوڑا اٹھاتے وقت ہوا.
-صفائی ملازم ٹریکٹر ٹرالی سے کوڑا اٹھا رہے تھے.
-اسكے تھوڑی دیر بعد اسٹیشن کے پیچھے بستی کے ایک مکان کی چھت سے دھماکے کی آواز آئی.

-دونوں دھماکوں میں کسی جانی نقصان کی خبر نہیں ہے.

agra blasts

-موقع پر پولیس اور دیگر افسران پہنچ چکے ہیں.
-اسسے پہلے آگرہ میں جمعہ کی رات ٹریک پر پتھر رکھ کر ٹرین پلٹنے کی کوشش ہوئی تھی.
-اسكے دوران ایک دھمکی بھرا لیٹر ملا تھا.

-آئی جی نے ٹریکٹر ڈرائیوردیپک سے پوچھ گچھ کی ہے.
-ديپك نے بتایا کہ ٹرالی کے ٹائر کے نیچے دھماکہ ہوا تھا.
-اسنے اترکر دیکھا تو دھواں اٹھ رہا تھا. وہیں دوسرا دھماکہ ایک گھر میں ہوا.
-پولیس دونوں دھماکوں کی تحقیقات کر رہی ہے.

agra blasts